معروف عالم دین ، امیر شریعت کرناٹک ، دارالعلوم سبیل الرشاد کے بانی , پرسنل لا بورڈ کے ممبرو ملی کونسل کے نائب صدر مفتی محمد اشرف علی کے انتقال پر مشاورت کا تعزیتی بیان
نئی دہلی : ۸؍ ستمبر ۲۰۱۷ء ، آج مشاورت کی اسٹنڈنگ کمیٹی کی ہنگامی نشست کا انعقاد کیا گیا۔نشست میں صدر مشاورت نوید ھامد صاحب ، نائب صدر مولانا اصغر علی امام مہدی سلفی صاحب ، سکریٹری جنرل مجتبیٰ فاروق صاحب اور جنرل سکریٹی مولانا عبدالحمید نعمانی صاحب شریک ہوئے ۔ تعزیتی قرارداد میں کہا گیا کہ معروف عالم دین ، امیر شریعت کرناٹک ، دارالعلوم سبیل الرشاد کے بانی ، پرسنل لا بورڈ کے ممبر و آل انڈیا ملی کونسل کے نائب صدرمفتی محمد اشرف علی صاحب کے اچانک انتقال پر صدر مشاورت نوید حامد صاحب نے اپنے دلی رنج و غم کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ وہ نہ صرف کرناٹک کے اہم دینی وملی رہنما تھے بلکہ ان کا شمار پورے ہندوستانی مسلمانوں کے ایک اہم دینی رہنما کے طور پربھی جانے جاتے تھے اور مسلمانوں کے مسائل خاص طور پر دینی تعلیم ، اصلاح معاشرہ اور احکام شرعیت کی اشاعت میں ہر ممکن کوشش کرتے تھے۔آل انڈیا ملی کونسل جنوبی ہند میں مفتی صاحب سے معروف تھی ۔ان کے انتقال سے جو خلا پیدا ہوا ہے اسے پر کرنا مشکل ہے۔صدر مشاورت نے کہامرحوم مسلم پرسنل لا بورڈ کے رکن کی حیثیت سے اس کی سر گرمی میں ہمیشہ شریک رہتے تھے۔
صدر مشاورت نوید حامد صاحب نے مرحوم کے لیے دعا ئے مغفرت کرتے ہوئے کہا کہ اللہ تعالیٰ ان کوجنت الفردوس میں اعلیٰ مقام عطافرمائے ، ان کے ملی و دینی کاموں کوقبول فرمائے ۔ ان کے اقارب و لواحقین کو تعزیت پیش کرتے ہوئے کہا کو اللہ تعالیٰ ان کو صبر جمیل عطا فرمائے۔آمین

(Visited 6 times, 1 visits today)